پاکستان

حکومت نے ملازمین کی تنخواہوں میں 15 فیصد اضافے کا اعلان کر دیا۔

حکومت پاکستان نے بی ایس 1 سے 19 تک کے غریب ملازمین کو بنیادی تنخواہ چلانے پر 15 فیصد تفاوت الاؤنس دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

فنانس ڈویژن کے ذیلی عنوان کے تحت جاری کردہ ایک باضابطہ نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ مذکورہ پیکیج کو صوبوں کو بھی ان کے فنڈز سے اپنانے کی سفارش کی گئی ہے۔ مزید برآں، فنانس ڈویژن کی جانب سے ٹائم اسکیل پروموشن کی سمری شروع کی گئی ہے تاکہ ایک ہی گریڈ میں طویل عرصے سے پھنسے ملازمین کو درپیش مشکلات کو کم کیا جا سکے۔

خیبرپختونخوا کی مشابہت پر پوسٹوں کی اپ گریڈیشن کا فیصلہ اپریل کے آخر تک اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کے ایم ایس ونگ کی جانب سے کی جانے والی اسٹڈی کے نتائج کی بنیاد پر کیا جائے گا۔

اسی طرح ایڈہاک ریلیف/الاؤنسز کو تنخواہ میں ضم کرنے کا فیصلہ تنخواہ اور پنشن کمیشن کی رپورٹ پر کیا جائے گا اور معاہدے کے مطابق بنیادی تنخواہ میں ضم کیا جائے گا۔

اپنا کمنٹ کریں