آرٹیکلز پاکستان تازہ ترین

پتہ نہیں پرسوں سیاست میں ہوں گا یا نہیں، شیخ رشید

اسلام آباد ( آن ا لائن )وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید نے کہا ہے کہ پاکستان کی دولت باہر لوٹ کر لے جانیوالے سارے لوگ عمران خان کے خلاف اکٹھا ہو گئے ہیں اور میں پاکستان کے ذمے داران سے کہنا چاہتا ہوں کہ اس ملک میں روزوں کے بعد نہ سہی تو حج کے بعد الیکشن کا اعلان کریں تاکہ لوگ فیصلہ کریں۔ ایسے ایسے لوگوں کے نخرے اٹھائے ہیں جن سے میں سلام نہیں لینا چاہتا،

راولپنڈی میں یونیورسٹی چارٹر کی گراونڈ بریکنگ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شیخ رشید احمد نے کہا کہ پاکستان کی سیاست میں کل کا دن بہت اہم ہے اور بعض چور لٹیرے ڈاکو اور پاکستان کی دولت باہر لوٹ کر لے جانے والے سارے لوگ عمران خان کے خلاف اکٹھا ہو گئے ہیںلیکن عمران خان ان چوروں اور لٹیروں کے

خلاف آخری بال تک لڑے گا ، میں عمران خان کے ساتھ چٹان کی طرح کھڑا ہوں۔ نسلی اصلی ہوتا ہے وہ امتحان کے وقت کھڑا ہوتا ہے۔ نہیں پتہ پرسوں سیاست میں ہونا ہے یا کہاں ہونا ہے،راولپنڈی شہر غداروں اور بکنے والوں کو پسند نہیں کرتا، ہمارے غریب کافی امتحان سے گزرے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ میں پیر کے دن سیاست سے ریٹائر ہونا چاہتا تھا لیکن اگر اس وقت میں عمران خان کو چھوڑوں گا تو میرا اپنا ضمیر مجھے ملامت کرے گا ورنہ

ایک شخص کی زندگی میں 15، 16 وزارتیں کافی ہوتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چاہے اتوار کا عمران خان کے خلاف عدم اعتماد کامیاب بھی ہو جائے لیکن وہ ان مرداروں سے شکست نہیں مانے گا اور اگر اس نے چوک اور چوراہے کی سیاست کی تو راولپنڈی کا بچہ بچہ عمران خان کے ساتھ کھڑا ہو گا۔شیخ رشید نے کہا کہ ہم بہت اہم علاقے میں واقع ہیں اور بغرافیائی طور پر تین عالمی طاقتوں سے منسلک ہیں اور میں پاکستان کے ذمے داران سے کہتا ہوں کہ آگے بڑھیں اور اس ملک میں روزوں کے بعد نہ صحیح تو

حج کے بعد الیکشن کا اعلان کریں تاکہ لوگ فیصلہ کریں۔ان کا کہنا تھا کہ ملک میں انتخابات کا فیصلہ فوری ہونا چاہیے تاکہ قوم فیصلہ کرے اور ایک منصفانہ انتخابات ہوں، نئے انتخابات کی اس لیے ضرورت ہے کہ وہ آدمی جو اپنے علاقوں کا ووٹ پیسوں کی خاطر بکتا ہے اور ضمیر فروشی کرتا ہے تو اس علاقے کے لوگوں کو چاہیے کہ اس کو مسترد کردیں اور دیانتدار لوگوں کو آگے لائیں

۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ ہم نے اپوزیشن کے جلسے والے دن چار لوگوں کو پکڑا ہے، ان میں محسن، اسماعیل، زعفران اور شہزاد کو پکڑا ہے جبکہ رئیس بھاگ گیا ہے، ان میں دو خودکش تھے۔ان کا کہنا تھا کہ پشاور میں دہشت گرد حملوں میں 70 افراد کو شہید کرنے والے چار دہشت گرد پولیس مقابلے میں مارے گئے۔

وفاقی وزیر داخلہ نے کہا کہ عمران خان کو عدم اعتماد میں شکست بھی ہوجائے تو وہ انکا مقابلہ کریں گے۔ میڈیکل یونیورسٹی بناتے وقت میرے 2 ساتھی شہید ہوگئے، وزیرداخلہ شیخ رشید نے شہدا کے لواحقین کے لیے 25،25لاکھ روپے دینے کا اعلان کیا۔وزیرداخلہ نے بتایا کہ عثمان بزدار نے جاتے جاتے وقارالنسا یونیورسٹی کا نوٹیفکیشن جاری کردیا،

زندگی کا سب سے مشکل کام وقار النسا کالج کو یونیورسٹی بنانا ہے، نظام کی خرا بی کی وجہ سے 14بار لاہور جانا پڑا، ایکنک میں نالہ لئی کا منصوبہ رکھا تھا، لوگ نہیں چاہتے غریبوں کی بستیاں ترقی کریں۔ایسے ایسے لوگوں کے نخرے اٹھائے ہیں جن سے میں سلام نہیں لینا چاہتا، نئے انتخابات کی اس لئے ضرورت ہے تاکہ لوگ دیانت داروں کو منتخب کریں۔

اپنا کمنٹ کریں