آرٹیکلز دلچسپ

چھ چیزوں سے پہلے مرجانا بہتر ہے

رسول اللہ ﷺ نے فرمایا : کہ جب تمہارے سامنے چھ چیزیں ظاہر ہونے لگیں تو تمہارے لیے دنیا میں زندہ رہنے سے م وت بہتر ہوگی۔ حضرت عبس غفاری رضی اللہ عنہ سے مروی ہے : وہ فرماتے ہیں ۔ کہ میں نبی کریم ﷺ فرماتے ہوئے سنا ہے کہ چھ چیزوں پر م وت کے ذریعہ سبقت کر جاؤ یعنی ان سے پہلے مرجاؤ۔ پہلی بے وقوفوں اور نااہلوں کی امارت اور سربراہی پر ، دوسری پولیس کی کثرت پر ، تیسری فیصلہ کی فروختگی پر یعنی کے بقاؤ فیصلے پر ، چوتھی خ ون ریز ی کو معمولی سمجھے جانے پر، پانچویں رشتہ ناتا توڑے جانے پر اور چھٹی ایسی نسل پر جو قرآن کریم کو باجاگانا بنا ئے گی۔

وہ تلاوت کرنے والے کو آگے کریں گے جوان کو قرآن گانے کی لے میں سنائے گا۔ اگرچہ وہ دین کے فہم میں ان سے کم ترہوگا( مگر محض خوش الحانی کی وجہ سے آگے بڑھایا جائے گا)۔ اس حدیث پاک میں جناب رسالت مآب ﷺ نے چھ ( قسم کی تباہ کن چیزوں کی پیش گوئی فرمائی ہے ۔ جن سے امت کا حال بد سے بد تر ہوجائے گا، معاشرہ نہایت خراب ہوجائے گا، اسلام کا پورا حلیہ بدل جائے گا۔ اس وقت کے لیے آپ ﷺ نے فرمایا: کہ ایسی زندگی سے م وت بہتر ہوجائے گی۔

اپنا کمنٹ کریں